سرمایہ کاری کے لیے ڈیجیٹل پاکستان ضروری ہے، او آئی سی سی آئی

سلام آباد ۔ 24 ستمبر (اے پی پی) پاکستان میں کاروباری آسانیاں پیدا کرنے، شفافیت کو یقینی بنانے، حکومت کے دیگر حکومتوں سے رابطوں اور ریاست کی جانب سے شہریوں کو سہولیات کی فراہمی کی بہتری کیلئے ”ڈیجیٹل پاکستان“ کے قیام پر خصوصی توجہ دینے کی ضرورت ہے۔ اوورسیز انویسٹرز چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری (او آئی سی سی آئی) کی رپورٹ کے مطابق ملک میں کی جانے والی براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری (ایف ڈی آئی) کی کمی کا ایک بنیادی سبب کاروباری اخراجات کا اضافہ اور مشکلات ہیں جس کی وجہ سے ملک میں کی جانے والی ایف ڈی آئی مجموعی قومی پیداوار (جی ڈی پی) کے ایک فیصد کے قریب ہے۔

Reference: http://urdu.app.com.pk

ملک سے پھلوں کی برآمدات میں 20.79 فیصد اضافہ ریکارڈ

اسلام آباد ۔23 ستمبر(اے پی پی)گزشتہ ماہ کے دوران ملک سے پھلوں کی برآمدات میں 20.79 فیصد اضافہ ریکارڈ کیاگیا۔ادارہ شماریات پاکستان کے اعدادوشمارکے مطابق اگست 2018ءکے دوران پاکستان نے پھلوں کی برآمدات سے 36.45 ملین ڈالر کا زرمبادلہ حاصل کیا جو اگست2017ءکے مقابلے میں 20.79 فیصد زیادہ ہے۔اگست2017ءکے دوران پاکستان نے پھلوں کی برآمدات سے 30.18 ملین ڈالرکازرمبادلہ حاصل کیا تھا۔

Reference: http://urdu.app.com.pk

دبئی میں جیولری مصنوعات کی بین الاقوامی نمائش نومبر میں منعقد ہوگی

اسلام آباد ۔ 22 ستمبر (اے پی پی) متحدہ عرب امارات کے شہر دبئی میں جیولری مصنوعات کی بین الاقوامی نمائش نومبر میں منعقد ہوگی ۔انٹرنیشنل جیولری شو وی اوڈی دبئی 2018 ءکے نام سے بین الاقوامی نمائش 14 نومبر سے شروع ہوکر 17 نومبر تک جاری رہی گی۔اس نمائش میں پاکستان سمیت متعدد ممالک کی کمپنیوں کی شرکت متوقع ہے۔

Reference: http://urdu.app.com.pk

Graduate seminar on Technology Innovation and Entrepreneurship at MUET

Graduate Seminar on Technology and Entrepreneurship: Ecosystem of Universities of Pakistan held at U.S.-Pakistan Center for Advanced Studies in Water (USPCAS-W) MUET Jamshoro. 

Mehran University of Engineering & Technology Innovation Seminar

Dr. Zeeshan Khatri, Professor at Department of Textile Engineering, Mehran University of Engineering and Technology (MUET) said that Pakistan, due to various persisting problems and challenges, is one of the best for opportunities of entrepreneurship and particularly technopreneurship in the world.

Dr. Khatri said that the passion is the most effective motivator for an entrepreneur while a businessman only focuses on the profit.

He noted that entrepreneurship is the mindset for an idea generation and innovation and value addition while technopreneurship is the value creation by the use of technology in the products. Dr. Khatri said that the technology is not for love or hate but the proper utilization.

He said in the market customers always try to find the uniqueness in the products so in this way the entrepreneur innovates and customer validates the products. Speaking on the importance of the technology, Dr. Khatri said that technology plays a vital role in the innovation and transformation of the product for its utility. “Successful entrepreneur is who believes in the achievable dreams, and for entrepreneurs, big problems are the bigger opportunities.” he added.

Dr. Khatri opined that the days of the time management were gone, now it is time for energy management efficiently and effectively. He said through effective and efficient energy management, the sustainable solutions for various daily life problems can be sought out.

On this occasion, USPCAS-W MEUT Deputy Director Prof. Dr. Rasool Bux Mahar introduced Dr. Zeeshan Khatri to the participants of the seminar. He said that Dr. Khatri is one of the top faculty members of MUET having the highest impact factor in the university and a maximum number of registered patents.

He told that Dr. Khatri is also a Co-founder of NanoCLO and Chief Executive Officer (CEO) of MuTech (Pvt.) Ltd. Dr. Mahar said that the USPCAS-W has been established at MUET with the generous support by U.S. Agency for International Development (USAID) Pakistan under the cooperative agreement at MUET and technically supported by University of Utah (UU), USA.

He said that the Center had been equipped with modern water laboratories to conduct applied research in the water sector in Pakistan. The USPCAS-W Students attended the seminar and also participated in the question-answer session of the graduate seminar.

 

The post Graduate seminar on Technology Innovation and Entrepreneurship at MUET appeared first on Technology Times.

Reference: www.technologytimes.pk

پاکستان برائلر مرغی کا گوشت پیدا کرنے والا دنیا کا 11 واں بڑ ا ملک ہے

اسلام آباد ۔16 ستمبر(اے پی پی)پاکستان برائلر مرغی کا گوشت پیدا کرنے والا دنیا کا 11 واں بڑن ملک ہے جہاں پر سالانہ 1.2 ارب برائلر مرغیوں کی پیداوار حاصل کی جارہی ہے۔ پاکستان پولٹری ایسوسی ایشن (پی پی اے ) کے بانی چئیرمین خلیل ستار نے کہا کہ برائلر مرغی کا گوشت پروٹینز کے حصول کا سستا ترین ذریعہ ہے۔ انہوں نے کہا پولٹری انڈسٹری میں مرغیوں کی خوراک میںکسی قسم کے ہارمونز کا استعمال نہیں کیا جاتا بلکہ ان کی خوراک خالصتا قدرتی اجزاءپر مشتمل ہوتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا بھر میں پانچ ہفتہ کے دوران برائلر مرغی سے حاصل ہونے والے گوشت کا وزن 2 کلو تک پہنچ جاتا ہے جبکہ وطن عزیز میں چھ ہفتوں کے بعد گوشت کی پیداوار 2 کلو تک پہنچتی ہے۔

Reference: http://urdu.app.com.pk