قدرت کا انمول تحفہ ہلدی یادداشت کو قوت  دینے میں مددگار

ہلدی قدرت کا انمول تحفہ ہے اور اس کی ایک اور زبردست خاصیت دریافت ہوئی ہے کہ یہ یادداشت کو بہت قوت دیتی ہے اور ڈپریشن کو دور کرنے میں مددگارثابت ہوتی ہے۔

امریکن جرنل آف جیرائٹرک سائیکاٹری میں ہلدی سے متعلق شائع ایک نئی تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ ہلدی دماغ کے لیے انتہائی بہترین ہے جب کہ اس کے دیگر بہت سے فوائد ہیں ۔

ماہرین کے مطابق ہلدی یادداشت کو 30 فیصد تک بہتر کرتی ہے اور دماغ میں جمع ہونے والے مضر پروٹین کو کم کرکے ڈپریشن کو بھی دور کرتی ہے، ماہرین اس مضر پروٹین کو الزائیمر اور دیگر کئی امراض کی وجہ بھی بتاتے ہیں۔

ہلدی کو گہری پیلی رنگت دینے والا ایک جادوئی مرکب ، سرکیومن اس میں سب سے اہم کردار ادا کرتا ہے، اس سے قبل یہ کولیسٹرول گھٹانے، سرطانی رسولیوں کو کم کرنے، بلڈ پریشر برقرار رکھنے ، اندرونی سوزش کم کرنے میں بہت مؤثر ثابت ہوا ہے۔

یونیورسٹی آف کیلیفورنیا لاس اینجلس کے سائنس داں ڈاکٹر جیری اسمال اور ان کے ساتھیوں نے یہ تحقیق کی ہے کہ ہلدی کا اہم مرکب سرکیومن طویل عرصے تک دماغی صحت پر بہترین اثرات مرتب کرتا ہے۔علاوہ ازیں ہلدی امراضِ قلب اور جوڑوں کے درد میں بھی مفید ثابت ہوچکی ہے۔

سروے کے لیے ان ماہرین نے 50 سے 80 سال تک کے افراد کو شامل کیا اور انہیں روزانہ 90 ملی گرام سرکیومن دن میں دو مرتبہ دیا گیا جبکہ بقیہ افراد کو فرضی دوا (پلے سیبو) دی گئی، سرکیومن کو بدن میں جذب کرانے کے لیے ایک سپلیمنٹ تھیرا سیورمن بھی دیا گیا، سرکیومن انہیں 18 ماہ تک کھلائی گی۔

اس پورے عرصے میں ہر تین ماہ بعد ان کے تھائی رائیڈ، دل کی دھڑکن اور دیگر جسمانی افعال کا مکمل معائنہ کیا گیا، اس دوران 30 افراد کے دماغ اسکین بھی کیے گئے جس سے معلوم ہوا کہ ہلدی میں شامل جز سرکیومن دماغ کے اندر حیرت انگیز مثبت اثرات مرتب کرتا ہے۔ اس کے بعد کئی ٹیسٹ سے معلوم ہوا کہ سرکیومن کا مسلسل استعمال ڈیڑھ سال میں یادداشت کو 28 فیصد تک بہتر بنانے میں معاون ثابت ہوا۔

دریں اثنا ماہرین کے مطابق ہلدی جوڑوں کا درد دور کرنے کے ساتھ ساتھ ہڈیوں کو مضبوط بنانے میں انتہائی معاون ہے اور اس کا مسلسل استعمال ہڈیوں کے بھربھرے پن کے مرض ’اوسٹیو پوروسس‘ سے محفوظ رکھتا ہے۔

Reference: http://www.trt.net.tr/urdu

Robokids & PAMS give hands-on experience of science to students

Robokids and the Pakistan Alliance for Maths and Science have organized an activity to give hands-on with experiments to enhance the learning experience for students of the government-run Shaheed Hasnain Higher Secondary School in Peshawar experienced.

Students from grade 8-10 recreated the experiments they had been studying in their textbooks. Using their robotics kits, they have developed technical models.

This activity gave exposure to children. They have experienced an opportunity to brush up their ‘STEM’ skills under the guidance of experts in Robotics, Games Programming, Electronics, and Mathematics.

School’s Principal Shabeer Ahmad has said that we appreciate this practical science experience for the students and urged them to think about the classroom teaching techniques.

Adnan, a student of grade 9 said that what I learn from science experience is beyond my imagination. The student added that we learned to use technology and inspired to invent new technology.

Reference: www.technologytimes.pk

NIC, Peshawar opens its doors to tech startups and entrepreneurs

Pakistan Telecommunication Company Limited and LMKT formally announce the inauguration of National Incubation Center (NIC), Peshawar funded by the Ministry of IT&T and Ignite Fund (formerly known as National ICT R&D Fund).
The launch ceremony was graced by the Shahid Khaqan Abbasi, Prime Minister of Pakistan as Chief Guest, along with Iqbal Zafar Jhagra, Governor of Khyber Pakhtunkhwa, Anusha Rahman, Minister of IT&T and other well-known dignitaries from the public and private sectors.
A large 12,000 sq. ft. facility in the heart of Peshawar at PTCL Training Center has been allotted for purpose to incubate more than 25 cherry-picked startups each year. NIC Peshawar equipped with the latest ICT infrastructure offering high-speed connectivity, seamless audio and video conferencing facilities, fully-managed IT and telecom services, among many others.
Developers will have great access to comprehensive mentoring services which allow them to seek guidance and support on design thinking, business planning, financial and operational aspects related to their startups such as marketing and communication, legal services and many more.
Launch NIC Peshawar has been received very positively by academia, public and private sectors with significant partnerships and MoUs lined up with leading organizations and universities. Some of these collaborations include design thinking workshops by IBM, FinTech Lab, BioTech & CNC Lab by CECOS University and linkages with Google Business Groups.
While addressing, Khaqan Abbasi said, “I am pleased with the growing cooperation between the public and private sectors to promote youth-led entrepreneurship in the country and realize the dream of a Digital Pakistan.”
He further added, “NIC Peshawar is proof of the government’s commitment of extending all kinds of support to relevant stakeholders in developing Khyber Pakhtunkhwa’s technology landscape and startup ecosystem.”
Industry-renowned start-up incubation curriculum developed by Founder’s Institute will be executed for the various cohorts that are inducted as part of NIC Peshawar. In addition, in collaboration with Microsoft, IBM and other global technology leaders will design specialized workshops which will be conducted during each session.
Anusha Rahman, while expressing her satisfaction with the launch proceedings, stated, “National Incubation Center, Peshawar will guide a luminous new era of entrepreneurship and innovation in KP, enabling many aspiring tech entrepreneurs and startups in creating game-changing solutions.”
She further added, “Ministry of IT&T is continually striving towards transforming Pakistan into a knowledge-based economy through various sustainable ICT initiatives.”
Yousuf Hussain, CEO, Ignite and the brain behind the NICs said, “A singular opportunity for startups that seek to solve meaningful problems with the help of academia and for corporates that seek to transform and thrive in this age of global competition and universal change by partnering with and investing in startups.”
Speaking on the occasion, Dr. Daniel Ritz President & CEO PTCL stated, “The Incubation Center Peshawar is an important milestone in the escalating innovation climate of Khyber Pakhtunkhwa. This center is an evidence to PTCL’s promise to empower the people of Pakistan through its ICT and Digital services.”
“Khyber Pakhtunkhwa has giant untapped talent and potential that can become a major driver in boosting Pakistan’s economy. I’m really excited about the prospect of working with innovative local entrepreneurs and startups in our pursuit for creating success stories bigger than ours”, said by Atif Khan, CEO LMKT while addressing the audience.
The introduction of initial cohort of 25 startups is already in progress and the first session is expected to commence by March 2018. In the subsequent months, the NIC Peshawar team and all its partners will work closely with local bodies and universities to identify and train top talent from KP province.

Reference: www.technologytimes.pk

کامیاب زندگی گزارنے کا گرُ، پُر اعتمادی

کامیاب زندگی گزارنے کا راز پُر اعتمادی میں پوشیدہ ہے ۔

جیسے جیسے انسان کے دل میں اس کی زندگی کا مقصد واضح ہوتا ہے ویسے ویسے اُس کے اعتماد میں اضافہ ہوتا رہتا ہے، ہر انسان کسی نہ کسی نظریے کی تلاش میں رہتا ہے، جب اُس کا نظریہ اس کو مل جائے تو اس کے بعد پھر اُس کے ذہن اور سوچ میں ٹھہراؤ آجاتا ہے، یوں اُس کی شخصیت میں ایک اعتماد آتا ہے۔

لہٰذا اگر آپ کے ذہن میں اپنا نظریہ اور مقصد واضح ہے تو پھر آپ کے لہجے میں بھی اعتماد موجود ہوگا، یوں آپ جب اپنی بات کرتے ہیں تو مُخاطب اس کو سنتا بھی ہے کیونکہ وہ آپ کے لہجے کے اعتماد کو محسوس کرتا ہے اور پھر آپ کے الفاظ کو بھی سمجھتا ہے۔ اِس کے برعکس جن لوگوں کو اپنی زندگی کا مقصد اُن کے ذہن میں واضح نہیں ہوتا تو اُن کے لہجے میں بھی آپ اعتماد کی کمی محسوس کریں گے لہٰذا لوگ اُن کی باتوں میں کشش محسوس نہیں کرپاتے۔

اسی سلسلے کی دوسری کڑی یہ ہے کہ جو بھی آپ کا نظریہ یا مقصد ہو اس پر آپ کو پختہ یقین ہو، اور اس حوالے سے مکمل علم رکھتے ہوں، سب سے اہم بات یہ ہے کہ آپ کبھی بھی دو کشتیوں کے سوار نہ بنیں، دو کشتیوں کا سوار کبھی بھی اپنی منزل تک نہیں پہنچ پاتا لہٰذا تعلیم ہو یا کیریئر، یا پھر زندگی کا کوئی اور موقعہ اپنے ذہن کو ایک نکتہء پر یکسو رکھنا بہت ضروری ہے، یوں آپ کے لیے فیصلے کرنا بہت آسان ہوجائے گا۔ مشکل بات یہ ہے کہ آج کے دور میں کسی ایک نکتے پر فوکس کرنا ایک مشکل امر ہے لیکن جب آپ اس فوکس کو پالیں تو پھر آپ کو پُر اعتماد ہونے سے کوئی نہیں روک سکتا۔

مثبت سوچ رکھنا اور منفی سوچ سے بچنا

جب آپ کی سوچ مثبت ہوگی تو آپ کا رویہ بھی مثبت ہوگا، یوں آپ کے ذہن میں آنے والے حالات و واقعات کے حوالے سے مثبت منظر کشی ہی ہوگی، یوں مایوسی، خوف اور کنفیوژن جیسی منفی چیزیں آپ سے دور رہیں گی اور آپ ہمیشہ پُراعتماد محسوس کریں گے۔ اس حوالے سے جوزف مرفی نے پوری کتاب لکھی ہے کہ کس طرح آپ کی سوچ کا زاویہ آپ کی عملی اور حقیقی زندگی میں تبدیلی لے کر آتا ہے۔

مثبت سوچ رکھنے کے لیے مثبت افراد کی صحبت بہت ضروری ہے، اپنے اطراف ایسے افراد کو جمع رکھیں جو آپ کو اپنے لیے مثبت محسوس ہوتے ہیں اور جو آپ کے مقصد کو حاصل کرنے میں آپ کا ساتھ دے سکتے ہیں، اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ منفی اور ایسے افراد، جو کہ ہمہ وقت قسمت کو کوستے رہتے ہیں، کے ساتھ رہ کر آپ مثبت رویہ رکھ سکتے ہیں تو آپ یقیناً غلطی پر ہیں۔

اپنی تیاری پوری رکھنا

ہم بات کرتے کرتے رک جاتے ہیں ہچکچاتے ہیں اور اپنا پیغام سننے والے تک نہیں پہنچا پاتے، اسی طرح کئی بار ایسا بھی ہوتا ہے کہ ہم زندگی میں کوئی بھی عملی قدم جیسا کہ کوئی کاروبار کرنا، کسی امتحان میں بیٹھنا، یا کوئی اہم فیصلہ نہیں لے پاتے، کیونکہ ہم اپنے اندر وہ اعتماد نہیں محسوس کرپاتے، اس کا مطلب یہ ہوتا ہے کہ ہماری تیاری مکمل نہیں، جب ہماری تیاری مکمل ہوگی تو یقیناً ہمارا لہجہ بھی پراعتماد ہوگا جھجک نہیں ہوگی، آوازکے اُتار چڑھاؤ ہر چیز پر گرفت ہوگی تو یقیناً سننے والے پر بھی ایک مثبت اثر ہوگا۔

اسی کے ساتھ پلان بی بھی ہمیشہ ریڈی رکھنا چاہیے، ہم کنفیوژن اور منفی خیالات کا شکار اس وقت ہوتے ہیں جب ہمیں معلوم ہوتا ہے کہ کسی وجہ سے ہمارا موجودہ پلان فیل ہوسکتا ہے اور ہمارے پاس اس حوالے سے کوئی بیک اپ پلان موجود نہیں تو یقیناً ہم خوف اور کنفیوژن کا شکار ہوجاتے ہیں۔ اگر آپ کے پاس پلان بی موجود ہوگا تو آپ کے اعتماد میں بھی بھرپور اضافہ ہوگا کیونکہ اس صورت میں آپ کو معلوم ہوگا کہ اگر ایک پلان فیل ہوتا ہے تو میرے پاس اس کو ٹھیک کرنے کے لیے دوسرا پلان موجود ہے۔

اللہ کی ذات پر یقین

انسان کتنی بھی کوشش کرلے، اللہ کی ذات کے سامنے وہ پھر بھی عاجز ہے لہٰذا اللہ کی ذات سے مدد مانگنے والا انسان مطمئن رہتا ہے کہ میں نے اپنی پوری کوشش کرنے کے بعد اللہ سے بھی مدد مانگ لی۔ اب اگر یہ کام ہوجاتا ہے تو ٹھیک ہے ورنہ اس کی رُکاوٹ میں اللہ ہی کی کوئی مصلحت اور بہتری موجود ہوگی، اس سوچ سے یقیناً انسان کا اللہ کی ذات پر یقین بھی پُختہ ہوتا ہے اور وہ اپنے دل میں ایک اطمینان بھی محسوس کرتا ہے جس کی وجہ سے اس کے اعتماد میں اضافہ ہوتا ہے۔

Reference: http://www.trt.net.tr/urdu

فلپائن: مایون نامی آتش فشاں متحرک ہوگیا، راکھ اگلنا شروع کر دی

فلپائن کے متحرک ترین آتش فشاں پہاڑ” مایون” میں دھماکہ ہوا جس کےبعد راکھ کے بادل ڈھائی ہزار میٹر تک بلند ہونا شروع ہو گئے۔

حکام نے قریبی آبادی کو راکھ سے بچنے کےلیے ماسک پہننے کی ہدایات کی ہیں اور محفوظ علاقوں میں منتقل ہونے کا کہا ہے ۔

مایون آتش فشاں پہاڑ سن 2013 میں بھی پھٹ پڑا تھا جس کے نتیجے میں اس پر موجود 4 یورپی کوہ پیما ہلاک ہو گئے تھے ۔

اس سے قبل سن 1987 میں ہونے والے دھماکے سے 100 افراد ہلاک ہو گئے تھے ۔

Reference: http://www.trt.net.tr/urdu