Jazz introduces affordable prepaid bundle for Hajj pilgrims


For the first time ever, Jazz introduce a prepaid bundle offer for Hajis, whereby they can call their loved ones back home without having to worry about affordability.

Called the Saudi Bundle, the offer includes incoming and outgoing call charges of PKR 15/min – more affordable and hassle free than the visitor SIMs available in Saudi Arab. 

The Saudi Bundle will also offer subscribers approximately 666 minutes of WhatsApp audio calls or 66 minutes of WhatsApp video calls, so they can share their experience with friends and family back home – WhatsApp will work in Saudi Arabia on this Bundle.  

To activate this offer, subscribers need to dial *7626*1# (with 500 balance in the account) from Pakistan or Saudi Arabia, or simply call 111. In case your roaming is not active in Saudia, then first get it activated with help of someone back in Pakistan by calling 111 and then dial *7626*1#.

Once subscribed, the bundle will be valid for 14 days. This offer is available for Jazz Prepaid customers for the whole 2018.

The post Jazz introduces affordable prepaid bundle for Hajj pilgrims appeared first on Technology Times.

Reference: www.technologytimes.pk

سکائپ میں کال ریکارڈنگ کا نیا فیچر متعارف

کیلی فورنیا(مانیٹرنگ ڈیسک) انٹرنیٹ پر ویڈیو کالز کے لئے مشہور ترین سوشل ویب سائٹ سکائپ نے کال ریکارڈنگ کا فیچر متعارف کرا دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق مائیکروسافٹ نے سکائپ کے لیے ایک میجر اپ ڈیٹ کا اعلان کیا ہے۔ یہ اپ ڈیٹ آنے والے مہینوں میں صارفین کے پاس اپ ڈیٹ ہوتی رہے گی۔اس سے پہلے کال ریکارڈنگ کےلیے صارفین کو تھرڈ پارٹی پلگ ان استعمال کرنا پڑتے تھے لیکن صارفین کی طلب اتنی زیادہ تھی کہ مائیکروسافٹ کو اب یہ فیچر متعارف کرانا ہی پڑا۔ کال ریکارڈنگ کا یہ فیچر مکمل طور پر کلاو¿ڈ بیسڈ ہے۔ یہ ان لوگوں کیلئے زیادہ مفید ہے جو مختلف ڈیوائسز سے سکائپ استعمال کرتے ہیں۔

اس طرح صارفین مختلف ڈیوائسز سے ہی اپنی گفتگو کی ریکارڈنگ سن سکیں گے۔ سکائپ میں آپ جب بھی کال ریکارڈ کریں گے تو گفتگو کے تمام شرکا کو اس بارے میں اطلاع مل جائے گی۔یہ فیچر اگرچہ ابھی دستیاب نہیں لیکن سکائپ کے ورژن 8.0 پر اپ ڈیٹ کیے جائیں گے۔ مائیکروسافٹ نے کچھ ایسے فیچر بھی متعارف کرائے ہیں، جودوسری ایپس کئی سال پہلے لانچ کر چکی ہیں۔ مثآل کے طور صارفین @ سے صارفین کو میشن کر سکتے ہیں اور چیٹ میڈیا گیلری سے دیکھ سکتے ہیں کہ چیٹ میں کیا کچھ شیئر کیا گیا ہے۔ سکائپ کے ماہانہ صارفین کی تعداد 30 کروڑ ہے۔ اس تعداد میں کافی عرصے سے کوئی اضافہ نہیں ہوا۔

The post سکائپ میں کال ریکارڈنگ کا نیا فیچر متعارف appeared first on JavedCh.Com.

Reference: JavedCh.Com

واٹس ایپ میں میسج فارورڈ کرنے کے حوالے سے نئی پابندیاں

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) واٹس ایپ نے جعلی وائرل افواہوں کو پھیلنے سے روکنے کے لیے دنیا بھر میں اپنے تمام صارفین پر پیغامات آگے فارورڈ کرنے کے حوالے سے پابندیوں کا اعلان کیا ہے۔ دنیا کی مقبول ترین میسجنگ اپلیکشن میں ابھی صارفین جتنے مرضی افراد اور گروپس کو چاہیں، پیغامات بیک وقت فارورڈ کرسکتے ہیں، تاہم اب ایسا نہیں ہوسکے گا۔ واٹس ایپ نے جمعرات کو رات گئے ایک بلاگ پوسٹ میں بتایا۔

‘ آج سے ہم ایک ٹیسٹ شروع کررہے ہیں جس کے تحت فارورڈنگ کو محدود کردیا جائے گا اور اس کا اطلاق واٹس ایپ استعمال کرنے والے ہر صارف پر ہوگا’۔ واٹس ایپ کا نیا فیچر جو ‘خطرناک’ پیغامات سے الرٹ کرے بلاگ میں بتایا گیا ‘ بھارت میں جہاں لوگ دنیا کے کسی بھی ملک کے مقابلے میں سب سے زیادہ پیغامات، تصاویر اور ویڈیوز شیئر کرتے ہیں، وہاں بھی ہم فارورڈ پیغام کی حد کا ٹیسٹ کررہے ہیں اور ایک وقت میں صرف 5 چیٹ کو پیغام فارورڈ کیا جاسکے گا، جبکہ ہم کوئیک فارورڈ بٹن بھی میڈیا میسجز میں سے ہٹا رہے ہیں’۔ واٹس ایپ کی جانب سے بلاگ میں یہ تو نہیں بتایا گیا کہ بھارت سے باہر دیگر ممالک میں فارورڈ میسج کی کیا حد ہوگی۔ تاہم کمپنی کے ایک ترجمان نے اس حوالے سے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ دنیا بھر کے صارفین کے لیے یہ حد 20 ہوگی اور لوگ 20 سے زیادہ دوستوں یا گروپس میں کسی پیغام کو فارورڈ نہیں کرسکیں گے۔ یہ گزشتہ 3 ہفتوں کے دوران واٹس ایپ کی جانب سے جعلی افواہوں کو پھیلنے سے روکنے کے لیے تیسرا بڑا اقدام ہے۔ اس سے قبل واٹس ایپ کی جانب سے فارورڈ میسج لیبل دنیا بھر میں متعارف کرایا گیا تھا تاکہ لوگوں کو معلوم ہوسکے کہ یہ ان کے دوست نے خود لکھ کر نہیں بھیجا۔ واٹس ایپ میں ‘فارورڈ’ میسج پکڑنا اب آسان ہوگیا اسی طرح گزشتہ ہفتے بھارت اور رواں ہفتے پاکستان میں اخبارات میں پورے صفحے کے اشتہارات کے ذریعے صارفین کو جعلی خبروں کی شناخت کی ٹپس سے آگاہ کیا گیا۔ اس سے قبل واٹس ایپ کی جانب سے ایک فیچر کے ذریعے گروپ ایڈمن کو گروپ میں میسجز پوسٹنگ کو کنٹرول کرنے کا اختیار بھی دیا گیا تھا۔ بھارت میں واٹس ایپ سے پھیلنے والی افواہوں کے نتیجے میں مشتعل ہجوم کے ہاتھوں ہلاکتوں کے مختلف واقعات کے بعد اس میسجنگ اپلیکشن کو شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑا تھا، جس کے بعد سے کمپنی کی جانب سے مختلف اقدامات کیے جارہے ہیں۔

The post واٹس ایپ میں میسج فارورڈ کرنے کے حوالے سے نئی پابندیاں appeared first on JavedCh.Com.

Reference: JavedCh.Com

SATHA innovation Award 2018 is given to Project A Supercomputing Platform For Artificial Intelligence

Dr. Tassadaq Hussain Won South Asia Triple Helix Award (SATHA) Innovation Award for the Project “A Supercomputing Platform for Artificial Intelligence

The project was supproted by UCERD Islamabad.

Dr. Tassadaq has Professional Associations:
Riphah Int’l University
HiPEAC: European Network on High Performance and Embedded Architecture and Compilation
Barcelona Supercomputing Center and Microsoft Research Centre Spain
Université de Valenciennes France, Laboratory of Industrial and Human Automation, Mechanics and Computer Science Department of Automation and Control

Image

About SATHA Innovatoin Award:
South Asia Triple Helix Association (SATHA) is part of International Triple Helix Association (THA) that advocates for University-Industry-Government Linkages. SATHA presents Innovation Awards to those heroes who contributed significantly to Industry, Academia and Public sector.

Reference: www.technologytimes.pk

واٹس ایپ کا نیا فیچر جو ‘خطرناک’ پیغامات سے الرٹ کرے گا

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا کی مقبول ترین میسجنگ اپلیکشن واٹس ایپ کو گزشتہ دنوں بھارتی حکومت کی جانب سے شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا گیا کہ یہ پلیٹ فارم افواہیں اور جھوٹی خبریں پھیلانے کے لیے استعمال ہورہا ہے۔ واٹس ایپ نے بھی اس پر تسلیم کیا تھا کہ جرائم پیشہ عناصر کی جانب سے واٹس ایپ میں گروپ چیٹ کو افواہیں اور جعلی خبریں پھیلانے کے لیے استعمال کیا جارہا ہے۔

اور اب اس کے لیے ایک نیا فیچر متعارف کرایا جارہا ہے جو کہ صارفین کو گروپ میں فارورڈ کسی جعلی خبر سے خبردار کرے گا۔ یہ فیچر جسے فی الحال ‘ Suspicious Link ‘ کا نام دیا گیا ہے، کے ذریعے کمپنی خودکار طور پر گروپ چیٹ میں شیئر کیے جانے والے ویب سائٹس لنکس کے مستند ہونے کو چیک کرے گی۔ واٹس ایپ کے اس کارآمد مگر خفیہ فیچر کا علم ہوا؟ یہ فیچر فی الحال واٹس ایپ کے اینڈرائیڈ بیٹا ورژن میں ٹیسٹ کیا جارہا ہے۔ اس فیچر کے ذریعے جب صارف کو واٹس ایپ پر کسی ویب سائٹ کا لنک بھیجے جائے گا، تو اپلیکشن اس لنک کے بیک گراﺅنڈ کو چیک کرے گی اور کچھ مشتبہ ہونے پر صارف کو الرٹ کرے گی۔ ایسے میسج پر ایک ریڈ لیبل بھی ہوگا جو کہ اس کے اسپام یا مشتبہ ہونے کا عندیہ دے گا۔ یہ فیچر مستقبل قریب میں بہت جلد دنیا بھر میں متعارف کرائے جانے کا امکان ہے، تاہم سب سے پہلے بھارت میں ہی نظر آئے گا۔ واٹس ایپ کا یہ نیا فیچر کارآمد یا دل توڑ دینے والا؟ اس سے ہٹ کر بھی واٹس ایپ کی جانب سے ایک فیچر آزمایا جارہا ہے جو کہ اسپام اور فراڈ لنک کے بارے میں جاننے میں صارفین کی مدد کرے گا۔ اس سلسلے میں کمپنی کی جانب سے فارورڈڈ میسج کا لیبی استعمال کیا جائے گا۔

The post واٹس ایپ کا نیا فیچر جو ‘خطرناک’ پیغامات سے الرٹ کرے گا appeared first on JavedCh.Com.

Reference: JavedCh.Com