کراچی میں نگلیریا فالری نے ایک اور زندگی کا خاتمہ کردیا

کراچی(این این آئی)کراچی میں نگلیریا فالری نے ایک اور زندگی کا خاتمہ کردیا ہے، محکمہ صحت کے مطابق رواں سال کراچی میں نگلیریا فائولری سے تین اموات ہوچکی ہیں۔تفصیلات کے مطابق 34 سالہ شعیب لیاقت آباد کا رہائشی اور نجی اسپتال میں زیر علاج تھا،رواں سال سندھ میں نگلیریا سے اموات کی تعداد تین ہوگئی اس سے قبل کھارادر کا 44 سالہ رہائشی رشید شاہ نگلیریا سے جاں بحق ہوگیا تھا۔

جبکہ سال کا پہلا کیس اورنگی ٹائون سے سامنے آیا تھا جہاں 21 سالہ نوجوان انس اسلم خطرناک امیبا کی انفیکشن کے نتیجے میں چل بسا تھا۔سندھ حکومت کی نگلیریا فاولری مانیٹرنگ کمیٹی کے فوکل پرسن ڈاکٹر ظفر مہدی کا کہنا ہے کہ کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کی جانب سے پانی میں کلورین نہیں ملائی جارہی جس کی وجہ سے پانی میں خطرناک بیکٹیریا اور نگلیریا فاولری کی تعداد مسلسل بڑھ رہی ہے۔

The post کراچی میں نگلیریا فالری نے ایک اور زندگی کا خاتمہ کردیا appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔

بلڈ پریشر کا عالمی دن، عورتوں میں بلڈ پریشر کی شرح مردوں سے ذیادہ ہے : طبی ماہرین لاہور جنرل ہسپتال

لاہور(این این آئی) غیر متوازن زندگی سے فشار خون ہائی بلڈپریشر کے خطرات لاحق ہوجاتے ہیں بلڈ پریشر ایسا موذی مرض ہے جو فالج کے حملے کا باعث بھی بنتا ہے ہائی بلڈ پریشر کو انسان کا خاموش قاتل بھی کہاجاتا ہے۔ پی جی ایم آئی و ایل جی ایچ کے پروفیسر آف میڈیسن ڈاکٹر غیاث النبی طیب ، ایسو سی ایٹ پروفیسر ڈاکٹر اسرار الحق طور اور اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر غیاث الحسن نے بلڈ پریشر کے عالمی دن کے

حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ملک میں ہائی بلڈپریشر کامرض بڑی تیزی سے بڑھ رہا ہے زیادہ تر یہ بیماری پختہ عمریابڑھاپے کے دورمیں لاحق ہوتی ہے مگر پاکستان میں اٹھارہ سال عمر سے اوپر جانے والے کم وبیش 20فیصد افراد کسی نہ کسی درجے پر بلڈ پریشر میں مبتلا ہوجاتے ہیں ہمارے ہاں عورتوں میں بلڈ پریشر کی شرح مردوں سے زیادہ ہورہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ بلڈ پریشر کو معمولی نہ سمجھیں اسے سنجیدگی سے لیں اور فوراً اپنے معالج یا ہسپتال سے رابطہ کریں ۔لاہور جنرل ہسپتال کے طبی ماہرین نے کہا کہ بلڈ پریشر کے اسباب میں گردوپیش کا کلچر انسان کے فطری رجحانات اور صفائی ستھرائی کی کیفیت کا بڑا دخل ہے بلاشبہ جسمانی نظام اندرونی حصوں کی خرابیاں اور بگاڑ بھی بلڈپریشر کا باعث بنتے ہیں لیکن اگر انسان کے گردوپیش کا ماحول بہتربنادیا جائے اس کے معاملات میں اعتدال اور توازن ہوتو اس کا جسمانی اوربدنی نظام بھی انہیں خطوط پر کام کرتا رہتا ہے صحت مندی کے ساتھ اور بلڈ پریشر یا کوئی دوسری تکلیف اس کے نزدیک بھی نہیں پھٹکتی متوازن اور سادہ خوراک صبح شام کی واک یا ہلکی پھلکی ورزش کھیل کود سائیکلنگ تیراکی وغیرہ انسان کو فٹ رکھنے میں بڑے معاون ثابت ہوتے ہیں انسان کی نفسیاتی کیفیت سوچ اور احساسات وغیرہ کا بھی اسکی جسمانی صحت پر بڑااثر مرتب ہوتاہے مثلا جولوگ چھوٹے موٹے معاملات پر بھی غصے اور چڑچڑاہٹ میں مبتلا ہوجاتے ہیں یا وہ زود حس ہوتے ہیں تو انکے خون کا بھی دبائوبڑھ جاتا ہے گھریلو تفکرات معاشی پریشانیاں غربت فاقہ کشی اورلڑائی جھگڑے کا ماحول بھی بلڈپریشر کا سبب بن جاتا ہے اس صورت حال سے بچنے کا واحد راستہ یہی ہے کہ ہم اپنی روزمرہ زندگی سرگرمیوں کو سادہ بنائیں پھلوں سبزیوں اور دالوں کا استعمال زیادہ سے زیادہ کریں چکنائی

نمک مصالحہ جات سے گریز کریں ہر روز صبح شام ہلکی پھلکی ورزش اور واک ضرور کریں اپنے مزاج سوچ احساسات اور رویے میں توازن اور اعتدال پیدا کریں معمولی گھریلو باتوں پر ایک دوسرے سے الجھنے کڑھنے اور غصے سے بچیں دوسرو ں کی خوشیوں میں شریک ہوں انکی کامیابیوں پرخوش ہوں جس قدر ممکن ہودوسروں کو آسانیاں فراہم کریں ایک صحت مندمتوازن سوچ ہمیں رویہ اور خوراک ہمیں بلڈ پریشر جیسی اذیت ناک مرض سے محفوظ رکھ سکتے ہیں اپنی شوگر کولیسٹرول

اوربلڈ پریشر کو گاہے بگاہے چیک کروانے سے موذی امراض سے بچا جاسکتاہے۔انہوں نے کہا کہ مریض کو ہائی بلڈ پریشر کے حملے کا احساس نہیں ہوتا مگر بعض حالتوں میں اس کا اندازہ ضرور لگایاجاسکتا ہے مثلا مریض کا رویہ اور چال ڈھال غیر متوازن پائوں لڑکھڑانے لگتے ہیں دوسروں کے ساتھ معاملات اور بات چیت کے دوران تیز ی اور تندہی جھنجھلاہٹ اور بات بات پرغصہ آجانا ان کی علامات میں شامل ہے۔ان حالات میں مریض کو فوری طور اپنے معالج کے پاس لے جانا چاہیے۔

The post بلڈ پریشر کا عالمی دن، عورتوں میں بلڈ پریشر کی شرح مردوں سے ذیادہ ہے : طبی ماہرین لاہور جنرل ہسپتال appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔

راولپنڈی ،پنجاب فوڈ اتھارٹی کی کارروائی ،ایک ہزار 60 کلو ناقص گوشت برآمد

راولپنڈی (این این آئی)راولپنڈی میںڈ پنجاب فوڈ اتھارٹی نے بڑی کارروائی کے دور ان ایک ہزار 60 کلو ناقص گوشت برآمد کرلیا ، بیف شاپ اور گودام سیل کر کے مقدمہ درج کرلیا گیا ۔ڈی جی فوڈ اتھارٹی کے مطابق باغ سرداراں، اللہ والی مسجد کے علاقے میں چھاپہ مار کاروائی کی گئی،رحمان بیف شاپ کے گودام سے ناقص گوشت برآمد کیا گیا۔ بیف شاپ اور گودام سیل کر کے 3 افراد کے خلاف مقدمہ درج کروا دیا گیا۔

کیپٹن ریٹائرڈ محمد عثمان کے مطابق 1060 کلو گرام ناقص اور باسی گوشت ڈمپنگ سائٹ پر تلف کر دیا گیا۔ڈی جی فوڈ اٹھارتی کے مطابق عوامی شکایت موصول ہونے پر ویٹنری آفیسر کی سربراہی میں ٹیم نے کاروائی کی،باسی گوشت کے استعمال سے نظام انہضام کی موزی بیماریاں پیدا ہوتی ہیں۔کیپٹن محمد عثمان کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب کی ہدایت کے مطابق عوام کو محفوظ خوراک کی فراہمی کیلئے کوشاں ہیں۔

The post راولپنڈی ،پنجاب فوڈ اتھارٹی کی کارروائی ،ایک ہزار 60 کلو ناقص گوشت برآمد appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔

پنجاب میں تیزی سے پھیلتے موزی مرض ایڈز پر نیب لاہور آگاہی و تدارک ونگ سرگرم

لاہور (این این آئی) پنجاب میں عطا ئی ڈاکٹروں، بلڈ بینک، بلڈ ٹیسٹنگ لیب و دیگر زرائع سے تیزی سے پھیلتے موزی مرض ایڈز پر نیب لاہور آگاہی و تدارک ونگ سرگرم ہوگیا ۔پنجاب میں تیزی سے پھیلتے موزی مرض ایڈز پر بریفنگ کیلئے سیکرٹری ہیلتھ زاہد اختر زمان، ڈی جی ہیلتھ ڈاکٹر ہارون جہانگیر خان، ایڈیشنل سیکرٹری ٹیکنیکل ڈاکٹر عاصم کو طلب کیا گیا۔بریفنگ میں نیب لاہور کی

جانب سے ڈائریکٹر آگاہی و تدارک ونگ سید حسنین، ڈائریکٹر انویسٹی گیشن احترام ڈار اور دیگر افسران نے شرکت کی ۔ ایڈیشنل سیکرٹری ٹیکنیکل ڈاکٹر عاصم الطاف نے پنجاب ایڈز کنٹرول پروگرام کے تحت ایڈز کے پھیلائو کی روک تھام کیلئے ابتک اٹھائے گئے اقدامات پر بریفنگ دیتے ہوئے ایڈز کنٹرول پروگرام کا جامع تعارف اور پروگرام کے تحت حکومتی اقدامات سے آگاہ کیا ۔بریفنگ میں بلڈ بینک، بلڈ ٹیسٹنگ لیب، عطائی ڈاکٹر، حجام و غیر اخلاقی سرگرمیوں کے مراکز ایڈز پھیلائو کی بنیادی وجہ قرارپائے گئے ۔ بریفنگ میں ڈاکٹر عاصم نے بتایا کہ ایڈز کے شکار مریضوں کو متعدد معاشرتی مسائل درپیش ہیں۔ایڈز کے پھیلائو کی روک تھام کیلئے 38 انفیکشن کنٹرول پروگرام اور ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹیز کا قیام عمل میں لایا جا چکا ہے۔ایڈز کیخلاف آگاہی کیلئے کالجز و یونیورسٹی لیول پر سیمینار، پوسٹر مقابلے اور اس موضوع پر ڈراموں کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔پنجاب میں گجرات، لاہور، ڈی جی خان اور فیصل آباد میں بالترتیب ایڈز کے زیادہ سے زیادہ کیسز منظرعام پر آئے ہیں ۔حجام و بیوٹی سیلونز کی لائسینسنگ سسٹم کے تحت رجسٹریشن کی جا رہی ہے۔نیب حکام کی جانب سے پنجاب ایڈز کنٹرول پروگرام کے تحت اٹھائے گئے اقدامات پر خدشات کا اظہارکیا گیا ۔ نیب کے مطابق بریفنگ میں پنجاب ایڈز کنٹرول پروگرام کے مالی امور کی کسی قسم کی وضاحت نہیں کی گئی ۔پنجاب ایڈز کنٹرول پروگرام کے تحت مالی بجٹ کی مکمل تفصیلات بشمول بین الاقوامی فنڈنگ کی مکمل تفصیلات طلب کر لی گئیں۔نیب حکام کا کہنا ہے کہ دیکھیں گے کہ الاٹ کئے گئے بجٹ کا مصرف حقیقی رہا یا مصنوعی طرز پر ہی خرچ ہوا۔ انسانی زندگیوں کا معاملہ ہے، ایڈز کنٹرول پروگرام کے مندجات کا بغور جائزہ لیں گے۔

The post پنجاب میں تیزی سے پھیلتے موزی مرض ایڈز پر نیب لاہور آگاہی و تدارک ونگ سرگرم appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔

Govt to prohibit plastic bags in ICT by August 14

The government is currently working on a plan to proscribe single use plastic bags in Islamabad Capital Territory (ICT) by August 14, as informed by the minister for Climate Change, Zartaj Gul to the National Assembly.

Govt to prohibit plastic bags in ICT by August 14As an substitute to plastic bags, the ministry has distributed 5,000 cotton bags amongst parliamentarians, media personnel and officials of Ministry of Climate Change, employees of the Federal government to combat the menace of raising plastic pollution.

Moreover, several cotton bags are being procured for distribution in Juma and ltwaar bazars and various markets without any penny of cost just to raise awareness campaign on the hazards plastics bags that for the most part hit the eco-friendly environment.

Keeping in line, the Environmental Protection Agency (Pak-EPA) had conducted a detailed survey of Industrial Estate of Islamabad and takes preemptive measures and introduces environment friendly bio-degradable shopping bags in collaboration with four companies.

Pak-EPA, Islamabad Chamber of Commerce and Industries (ICCI) and all associations of industries are working together for the first model green industrial zone of Pakistan and all essential steps are being taken under the green and clean initiative of Prime Minister of Pakistan.

The post Govt to prohibit plastic bags in ICT by August 14 appeared first on Technology Times.

Reference: www.technologytimes.pk