معدہ کمزور ہے تو ناشتے میں اس پھل کو کھائیں،آپ کو فائدہ پہنچائے گا

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) کہا جاتا ہے کہ دنیا کا سب سے بہترین کینو پاکستان میں ملتا ہے اور یہ ایسا غلط بھی نہیں۔ مالٹے کی اس قسم کا ذائقہ لوگوں کے دلوں کو خوب بھاتا ہے جب ہی تو ہر سال یہ اس موسم میں سب سے زیادہ فروخت ہونے والا پھل ہے جبکہ برآمد بھی کیا جاتا ہے۔ کینو کا ترش ذائقہ کیلوریز میں کم مگر غذائی اجزاء سے بھرپور ہوتا ہے جبکہ اس میں موجود وٹامنز اسے بہترین پھل بناتا ہے۔

یہاں ذیل میں اس کے فوائد بتائے جارہے ہیں۔ نظام ہاضمہ بہتر کرے اس پھل کی چند بہترین خوبیوں میں سے ایک معدے میں اس کا آسانی سے جذب ہونا اور نظام ہاضمہ پر دباﺅ ڈالے بغیر اسے بہتر بنانا ہے، اگر معدہ کمزور ہے یا بدہضمی کا مسئلہ ہے تو ناشتے میں اس پھل کو کھائیں، دن میں دو بار کھانا موثر نتائج میں مدد دے گا۔ معدے کی تیزابیت اور سینے میں جلن دور کرے اگر آپ اکثر کھانے کے بعد معدے میں تیزابیت یا سینے میں جلن کو مھسوس کرتے ہیں، تو اس موسم میں کینو آپ کے لیے بہترین علاج ہے۔ یہ پھل معدنیاتی نمک سے بھرپور ہوتا ہے جو کہ معدے کی تیزابیت کو کم کرتا ہے جبکہ اسے روز کھانا سینے میں جلن کے مسئلے کو بھی دور رکھتا ہے۔ بڑھاپا دور رکھے کینو میں وٹامن سی کی مقدار بہت زیادہ ہوتی ہے اور یہ وٹامن عمر بڑھنے سے جسم میں آنے والی تنزلی کی روک تھام کے لیے انتہائی موثر ہے۔ کینو کھائیں یا اس کا رس پینا عادت بنانا جھریوں کو کنٹرول کرنے میں مدد دیتا ہے، اس میں موجود منرلز میٹابولزم کو ہی بہتر نہیں کرتا بلکہ ہموار اور جگمگاتی جلد کے لیے بھی فائدہ مند ہے۔ جسمانی توانائی بڑھائے کینو کو اس موسم میں کھانا عادت بنانا جسمانی توانائی کو بڑھانے بھی مدد دیتا ہے، کاربوہائیڈریٹس اور گلوکوز، شکر اور دیگر اجزاءسے بھرپور یہ پھل جسمانی توانائی کے لیے چند بہترین ذرائع میں سے ایک ہے۔ کولیسٹرول لیول متوازن کرے کینو جسم میں نقصان دہ کولیسٹرول کی سطح اور اثرات کو کم کرکے فائدہ مند کولیسٹرول کی سطح بڑھاتا ہے، یعنی روز اسے کھانا کولیسٹرول کم کرتا ہے، جس سے ہارٹ اٹیک اور فالج کا خطرہ کم ہوتا ہے۔ جلد اور بالوں کے لیے مفید وٹامن سی کی مناسب مقدار جسم کے دفاعی نظام کو ہی مضبوط نہیں کرتی بلکہ ایک پروٹین کولیگن کی مقدار مستحکم رکھنے میں بھی مدد دیتی ہے جو بالوں اور جلد

کے لیے بہت ضروری ہے۔ کینو وٹامن سی سے بھرپور ہوتا ہے جبکہ اس میں وٹامن اے بھی پایا جاتا ہے جو بالوں کی نمی برقرار رکھنے میں مدد دیتا ہے۔ دماغی افعال بہتر بنائے۔ کینو میں موجود مختلف اجزاء جیسے پوٹاشیم، وٹامن بی 9 اور اینٹی آکسائیڈنٹس دماغ کے لیے فائدہ مند مانے جاتے ہیں؛ پوٹاشیم دماغ کی جانب دورانِ خون بڑھانے اور اعصابی سرگرمیاں بڑھانے کے حوالے سے

توجہ مرکوز کرنے کے لیے ضروری ہے، وٹامن بی 9 عمر بڑھنے سے آنے والی دماغی تنزلی کی روک تھام کرکے الزائمر امراض سے بچاتا ہے، اس کے علاوہ کینو میں موجود وٹامن بی 6 متلی اور ڈپریشن سے بچاتا ہے۔ حاملہ خواتین کے لیے فائدہ مند اس میں موجود بی وٹامنز اور فولک ایسڈ دوران حمل فائدہ مند ثابت ہوتے ہیں، فولک ایسڈ کی کمی بچوں کے پیدائشی وزن میں کمی کا باعث بنتی ہے۔

خون کی شریانوں کی صحت کے لیے معاون وٹامن بی 6، وٹامن سی، پوٹاشیم اور فائبر دل کی صحت کو بہتر بناتے ہیں، ایک تحقیق کے مطابق جو لوگ پوٹاشیم سے بھرپور غذا کھاتے ہیں، ان میں خون کی شریانوں کے مسائل جیسے امراض قلب یا فالج وغیرہ سے موت کا خطرہ 49 فیصد تک کم ہوجاتا ہے۔ معدے کو مضبوط بنائے کینو، فائبر کے حصول کا بہترین ذریعہ ہیں، فائبر معدے کی صحت کے لیے بہت ضروری جز ہے جو کہ قبض، بدہضمی

اور دیگر مسائل کی روک تھام کرتا ہے۔ فائبر سے بھرپور غذائیں امراض سے پاک زندگی کی کنجی بلڈ پریشر کو صحت مند رکھے اس پھل میں موجود پوٹاشیم اور نمکیات کی کم سطح خون کی شریانوں کو پھیلاتی ہے اور بلڈ پریشر کو معمول کی سطح پر رکھتی ہے۔ موسمی امراض سے لڑے اس پھل میں موجود وٹامن سی جسمانی دفاعی نظام کو بہتر کرتا ہے جو کہ موسمی بیماریوں یا انفیکشن وغیرہ کے خلاف مزاحمت کرتا ہے جبکہ کینسر کا باعث بننے والے فری ریڈیکلز کو بھی کم کرتا ہے۔

The post معدہ کمزور ہے تو ناشتے میں اس پھل کو کھائیں،آپ کو فائدہ پہنچائے گا appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔

کیا آپ صحت مند ہیں؟ آسان ٹیسٹ سے جانیں

اسپین (مانیٹرنگ ڈیسک) کیا آپ بلاروکے 4 منزلوں تک سیڑھیں چڑھنے کی صلاحیت رکھتے ہیں؟ اگر ہاں تو آپ صحت مند اور مختلف امراض سے محفوظ رہ سکتے ہیں۔ یہ بات اسپین میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔ کوریونا ہاسپٹل یونیورسٹی کی تحقیق میں 13 ہزار کے قریب ایسے افراد میں اس خیال جائزہ لیا گیا جن کے بارے میں شبہ تھا کہ شریانوں کے امراض کا شکار ہیں یا ہوسکتے ہیں۔

نتائج سے معلوم ہوا کہ جن لوگوں کو 4 منزلوں تک سیڑھیوں چڑھنے میں مشکل کا سامنا ہوتا ہے، ان میں امراض قلب سے موت کا خطرہ 3 گنا جبکہ کینسر سے 2 گنا زیادہ ہوسکتا ہے۔ محققین کا دعویٰ تھا کہ نتائج سے ورزش کے فوائد کے مزید شواہد ملتے ہیں اور جسمانی طور پر فٹ رہنا اچھی صحت اور لمبی عمر کی ضمانت ہوسکتا ہے۔ اس تحقیق کے دوران رضاکاروں کو ٹریڈ مل پر چلنے یا بھاگنے کا کہا گیا جس کی رفتار کو بتدریج بڑھایا گیا جب تک وہ تھک نہیں گئے۔ بعد ازاں رضاکاروں کی جسمانی توانائی کو جانچا گیا اور مختلف نمبر دیئے گئے۔ محققین کے مطابق سست روی سے چلنے والے یا کھڑے ہونے والوں کو 3 سے کم نمبر ملیں، تیز چہل قدمی کرنے والوں کو 3 سے 6 جبکہ سخت جسمانی سرگرمیوں کو پسند کرنے والے جیسے جاگنگ 6 سے زائد نمبر حاصل کرنے میں کامیاب رہے۔ محققین نے بتایا گیا کہ جس کے نمبر جتنے کم ہوں گے، اس کے امراض قلب یا کینسر سے موت کا خطرہ اتنا ہی زیادہ ہوگا، مگر جسمانی سرگرمیوں کو بڑھا کر اسے کافی ھد تک کم کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر آپ بغیر روکے بہت تیزی سے تین سے چار منزلیں چڑھ سکتے ہیں تو آپ جسمانی طور پر اچھی صحت کے حامل ہیں، اگر ایسا نہیں تو یہ عندیہ یہ ہے کہ ورزش کریں اور اپنا معائنہ کراتے رہیں۔ اس تحقیق کے نتائج 2018 یورو ایکو امیجنگ کانفرنس کے دوران پیش کیے گئے۔

The post کیا آپ صحت مند ہیں؟ آسان ٹیسٹ سے جانیں appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔

تھر میں غذائی قلت سے مزید 2 بچے انتقال کرگئے

تھرپارکر(آ ئی این پی)تھر میں غذائی قلت کے باعث مزید 2 بچے انتقال کرگئے،محکمہ صحت کے ذرائع کے مطابق تھرپارکر میں غذائیت کی کمی سے مزید 2 بچوں کے انتقال سے رواں ماہ انتقال کرنے والے بچوں کی تعداد 14 ہوگئی ہے۔ذرائع کا بتاناہے کہ تھر میں غذائی قلت سے رواں برس انتقال کرنے والے بچوں کی تعداد 601 تک جا پہنچی ہے۔

The post تھر میں غذائی قلت سے مزید 2 بچے انتقال کرگئے appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔

کمزور اور بھربھرے ناخنوں سے نجات کے لیے مددگار نسخے

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) ناخنوں پر نیل پالش لگائیں یا نہیں، لمبے ہوں یا چھوٹے، مضبوط اور چمکدار ناخن ہمیشہ اچھے لگتے ہیں اور مجموعی طور پر اچھی صحت کی نشانی بھی ہوتے ہیں۔ تاہم اگر آپ کے ناخن اکثر ٹوٹ جاتے ہیں یا صحیح طرح اگتے نہیں ہیں، تو یہ کیلشیئم کی کمی کا نتیجہ ہوسکتا ہے۔ اس صورت میں دودھ سے بنی مصنوعات، سبزپتوں والی سبزیاں، مچھلی، گریاں اور انجیر وغیرہ کا

استعمال اس مسئلے سے نجات دلا سکتا ہے۔ کیا آپ ناخن گوشت میں گھسنے سے پریشان ہیں؟ تو یہ ٹوٹکے آزمائیں تاہم کچھ گھریلو ٹوٹکے بھی اس حوالے سے مددگار ثابت ہوسکتے ہیں۔ ناریل کا تیل ناریل کا تیل اچھا اینٹی آکسائیڈنٹ ہے اور ناخنوں کو فری ریڈیکلز کے نقصان سے تحفظ فراہم کرتا ہے جبکہ یہ جراثیم اور فنگل کش خصوصیات بھی رکھتا ہے، کچھ مقدار میں ناریل کے تیل کو گرم کرکے ناخنوں اور ارگرد کی جلد پر لگاکر اس وقت تک مالش کریں جب تک وہ جذب نہ ہوجائے۔ سیب کا سرکہ سیب کا سرکہ ناخنوں کو مضبوط بنانے کے لیے بہت فائدہ مند ہے، اسے استعمال کرنے کے لیے ایک گلاس گرم پانی میں ایک کھانے کا چمچ سرکہ ملائیں اور اس میں ناخنوں کو کچھ منٹ کے لیے ڈبو دیں، اس عمل کو روزانہ دہرائیں۔ لیموں کا عرق لیموں میں وٹامن سی کی مقدار بہت زیادہ ہوتی ہے جو کہ کولیگن کی پیداوار تیز کرتا ہے اور ناخنوں کو مضبوط بناتا ہے، اسے استعمال کرنے کے لیے آدھے لیموں کو ایک کپ گرم پانی میں نچوڑ کر مکس کریں اور اس میں ناخنوں کو 5 سے 10 منٹ کے لیے ڈبو دیں۔ زیتون کا تیل زیتون کا تیل جلد کی نمی اور ناخنوں کے لیے بہت زبردست ہے، زیتون کے تیل کو کچھ گرم کرکے ناخنوں پر لگا کر 5 سے 10 منٹ تک مالش کریں۔ انڈے کی زردی اور شہد ایک انڈے کی زردی کو 1/2 چائے کے چمچ گرم شہد میں مکس کریں اور اس مکسچر کو ناخنوں اور ارگرد کی جلد پر لگا کر پندرہ منٹ کے لیے چھوڑ دیں اور پھر دھولیں۔ انڈے کی زردی میں وٹامن اے اور فیٹی ایسڈز موجود ہوتے ہیں جو کہ کمزور اور بھربھرے ناخنوں کو مضبوط بنانے کے لیے موثر ہیں۔ بادام کا تیل بادام کے تیل میں وٹامن اے، بی اور ای کی مقدار بہت زیادہ ہوتی ہے، جو کہ جلد کی مرمت، نمی اور جگمگاہٹ بحال کرنے کے ساتھ ناخنوں کے لیے بھی مفید ہے، اس تیل کو گرم کرکے ناخنوں اور ارگرد کی جلد پر لگائیں اور کچھ منٹ تک مالش کریں۔ السی کا تیل اس تیل میں فیٹی ایسڈز کی مقدار بہت زیاد ہہوتی ہے جو کہ ناخنوں کی نشوونما کے لیے موثر ہیں، اس تیل کو ناخنوں پر لگا کر کچھ منٹ کے لیے مالش کریں۔

The post کمزور اور بھربھرے ناخنوں سے نجات کے لیے مددگار نسخے appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔

طبی لحاظ سے سونف کی چائے صحت کے لئے انتہائی مفید ہے، فوائد جانئے

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) سونف کو زمانہ قدیم سے طبی لحاظ سے صحت کے لیے فائدہ مند سمجھا جاتا ہے جو کہ متعدد امراض کی روک تھام میں مدد دے سکتی ہے۔ اسے خام شکل میں کھایا جائے یا چائے کی صورت میں، فائدہ ہر بار ہوتا ہے۔ سونف میں موجود آئل کو ادویات میں بھی استعمال کیا جاتا ہے، مگر کیا آپ نے کبھی سونف کی چائے پی ہے؟ اسے بنانا بہت آسان ہے۔

چائے بنانے کا طریقہ ایک سے 2 کھانے کے چمچ سونف کو پیس لیں اور اسے ایک کپ میں ڈالنے کے بعد اس میں گرم پانی شامل کردیں، اس کپ کو ڈھانپ دیں اور دس منٹ کے لیے ہلائیں، اس کے بعد چھان لیں اور چائے سے لطف اندوز ہوں، اگر دل کرے تو کچھ مقدار میں اس میں شہد کا اضافہ بھی کردیں۔ یہ چائے وٹامن اے، سی اور ڈی کے ساتھ ساتھ اینٹی آکسائیڈنٹس سے بھی بھرپور ہوتی ہے، جس کے فوائد درج ذیل ہیں۔ جسمانی وزن میں کمی چونکہ سونف نظام ہاضمہ کے عمل کو بہتر بناتی ہے، اسی لیے یہ غذائیت کو جزو بدن بنانے کا عمل بھی بہتر کردیتی ہے۔ اس طرح نقصان دہ اجزاءجسم سے خارج ہوجاتے ہیں، اسی طرح جسم میں گلوکوز کی سطح بھی متوازن رہتی ہے، یہ بے وقت کھانے کی خواہش کو قابو میں کرتی ہے جبکہ جسم میں اضافی سیال کو بھی خارج کردیتی ہے۔ دل کی صحت بہتر بنائے جگر صحت مند ہو تو کولیسٹرول کے ٹکڑے زیادہ بہتر طریقے سے ہوتے ہیں، سونف ان غذاﺅں میں سے ایک ہے جو جگر کے افعال کو مناسب طریقے سے مدد کرنے میں مدد دیتی ہیں جبکہ دل کی دھڑکن بہتر ہوتی ہے۔ آنکھ کی صحت کے لیے فائدہ مند سونف بینائی کو بہتر کرنے کے لیے بھی فائدہ مند ہے، اس میں موجود وٹامن سی بینائی کو بہتر بنانے میں کردار ادا کرتا ہے۔ کیل مہاسے کم کرے سونف میں موجود آئل ورم کش خصوصیات رکھتے ہیں اور جلدی مسائل جیسے کیل مہاسوں کے علاج میں مدد دیتا ہے۔

سونف جلد میں موجود اضافی سیال کو خارج کردیتی ہے جو کہ کیل مہاسوں کی شکل اختیار کرتے ہیں۔ ذیابیطس کے خلاف مزاحمت سونف ذیابیطس کے شکار افراد کو اس مرض سے لڑنے میں بھی مدد دیتی ہے، وٹامن سی اور پوٹاشیم کے باعث یہ بلڈ شوگر لیول کو کم کرتی ہے جبکہ انسولین کی سرگرمیوں میں اضافہ کرتی ہے جس سے بلڈ شوگر متوازن رہتا ہے۔ مسوڑوں کے لیے بہترین سونف

جراثیم کش خصوصیات کے باعث مسوڑوں کو بھی مضبوط بناتی ہے جس سے ورم یا سوجن کی روک تھام ہوتی ہے۔ نظام ہاضمہ کے مسائل دور کرے سونف مسلز کو ریلیکس کرنے کے ساتھ بائل کے بہاﺅ کو حرکت میں لاتا ہے جس سے درد کم ہوتا ہے اور نظام ہاضمہ بہتر ہوتا ہے۔ سونف کا استعمال جسم سے گیس کو بھی خارج کرتا ہے اور پیٹ پھولنے کا مسئلہ حل ہوتا ہے۔ نظام تنفس کے لیے بھی فائدہ مند ایک طبی تحقیق میں دریافت کیا گیا سونف کا استعمال سانس کے مسائل کو حل کرنے میں مدد ثابت ہوتا ہے، اس سے

نتھنے صاف ہوتے ہیں اور نظام تنفس کے امراض دور رہتے ہیں۔ یہ پھیپھڑوں کے لیے بھی فائدہ مند ہے۔ جوڑوں کے درد میں کمی لائے ایک تحقیق میں دریافت کیا گیا کہ جوڑوں میں ورم کے حوالے سے سونف کا استعمال فائدہ مند ثابت ہوتا ہے، یہ ایک اینٹی آکسائیڈنٹ کی سرگرمیوں کو بڑھاتا ہے جس سے جوڑوں میں ورم کم ہوتا ہے۔ ایک اور تحقیق میں بتایا گیا کہ سونف جوڑوں کے عوارض سے نجات کے لیے مفید ہے۔  یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین اس حوالے سے اپنے معالج سے بھی ضرور مشورہ لیں۔

The post طبی لحاظ سے سونف کی چائے صحت کے لئے انتہائی مفید ہے، فوائد جانئے appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔