راولپنڈی ۔ 10 دسمبر (اے پی پی) قومی ٹیسٹ ٹیم کے کپتان اظہر علی نے کہا ہے کہ سری لنکن ٹیم کے خلاف پہلے کرکٹ ٹیسٹ میچ میں اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کریں گے، بہت خوشی کی بات ہے ہوم گراونڈ پر کرکٹ بحال ہو رہی ہے، بدقسمتی سے آسٹریلیا میں پرفارم نہیں کر سکے، اب کوشش کریں گے اپنی غلطیوں کو دوبارہ نہ دھراہیں۔ منگل کو پنڈی سٹیڈیم میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اظہر علی نے کہا کہ ہمارے ٹیم میں ٹیلنٹ موجود ہے، ہمیں ہوم گراو¿نڈ پر کھیلنے کا موقع ملا، بھرپور فائدہ اٹھائیں گے، انہوں نے کہا کہ کوشش ہوگی بڑا سکور کروں ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں میچ کھیلنا خوشی کی بات ہے۔ انہوں نے کہا کہ کوشش ہوگی کہ عوام کی امیدوں پر پورا اتریں۔ انہوں نے کہا کہ خوشی ہے کہ دس سال کے بعد ٹیسٹ کرکٹ کی پاکستان میں واپسی ہوئی ہے، خواہش تھی ہمارے گراو¿نڈز کی رونقیں بحال ہوں، تمام پلیئرز بہت خوش ہیں اور پوری کوشش کرینگے ہماری فتح ہو۔ انہوں نے کہا کہ آسٹریلیا میں ہم اچھی طرح سے پرفارم نہیں کر سکے، ہوم گراو¿نڈ پر کھیل رہے ہیں پوری کوشش کرینگے جو کمی ہے اسے پور کریں، ہمارے سکواڈ میں ٹیلنٹ موجود ہے، کپتان کا کھیل میں بھی اپنا رول ہوتا ہے، پورا احساس ہے اور کوشش کر رہا ہوں کہ اپنی فارم بحال کروں۔ انہوں نے کہا کہ کوشش ہے کہ میں خود بھی بڑا سکور کروں، اگر کپتان اچھا پرفارم کریگا تو دیگر کھلاڑیوں کو بھی حوصلہ ہوتا ہے اور پریشر کو ہینڈل کرنے کی کوشش کرنی ہوگی، پاکستانی ٹیم میں دس سال ہو گئے ہیں، گزشتہ چار سے پانچ سال سے پوری کوشش کرتا ہوں ٹیم کو جتوانے میں اہم کردار ادا کرﺅں، مصباح الحق ہمیشہ میرے ساتھ رہے، سلیکشن کمیٹی اور کپتان ساتھ ساتھ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سری لنکا کو آسان نہیں لیا جا سکتا، باو¿لنگ اور بیٹنگ اچھی ہے، انہوں نے کہا کہ سری لنکا کو ہرانے کےلئے ڈسپلن کے ساتھ سے کھیلنا ہوگا۔ موسم کی صورتحال دیکھ کر 11 رکنی ٹیم فائنل ہوگی۔ اظہر علی نے کہا کہ آسٹریلیا میں 20 وکٹیں لینا مشکل ہوا ہے، کوشش کریں گے جیت کر عوام، انتظامیہ اور ٹیم کا اعتماد بحال کریں۔ اظہرعلی نے کہاکہ سری لنکن ٹیم جو چیلنج دے گی اس کو بیٹ کرنے کی صلاحیت موجود ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایک دو سریز ہارنے کے بعد فوری تبدیلی کی بات کرتے ہیں، نئی لاٹ کو وقت لگے گا کم بیک کرنے میں، عالمی کرکٹ کو واپس لانے کےلئے بہت سے لوگوں کی محنت شامل ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پوری ٹیم متحد ہے، ہم سب فیملی کی طرح ہیں، سری لنکن ٹیم کے کپتان دیمتھ کرونا رتنے نے پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ دس سال کے بعد یہاں آئے ہیں اچھا موقع ہے۔ پاکستان کے ساتھ سری لنکا اور دبئی میں بھی میچ کھیلا، انہوں نے کہا کہ پاکستان ٹیم شمار بہترین ٹیموں میں ہوتا ہے آسان نہیں لیں گے، مکی آرتھر پہلے پاکستان کے کوچ تھے اب ہمارے ساتھ ہیں، ان کے ساتھ ٹریننگ کر کے پاکستان کی ٹیم کو جاننے کا موقع ملا ہے، انہوں نے کہا کہ کوشش کرینگے کہ اچھا پرفارم کریں، بہتر موقع پر بہتر فیصلہ کرینگے یہی حکمت عملی ہے، مکی آرتھر کی وجہ سے ہمیں اچھا ایڈوانٹیج ملا ہے۔ پاکستان اور سری لنکا کے درمیان اچھا میچ ہو گا اور کوشش کریں گے اچھا پرفارم کریں۔ انہوں نے کہا کہ ہم پاکستان ٹیم کو اچھے سے جانتے ہیں یہ سری لنکن ٹیم کے لئے ایک مثبت پہلو ہے ۔ انہوں نے کہا کہ میرا پاکستان میں کھیلنے کا پہلا تجربہ ہے، بہت اچھا محسوس کر رہا ہوں ۔

Reference: http://urdu.app.com.pk

Leave a comment

Post here