خوابوں کو یاد رکھنے کا نسخہ سامنے آگیا

آسٹریلیا (مانیٹرنگ ڈیسک) کیلا، چنے اور ٹونا مچھلی میں پائے جانے والا وٹامن بی 6 لوگوں کو خواب یاد رکھنے میں مدد دیتا ہے۔ یہ دعویٰ آسٹریلیا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آیا۔ ایڈیلیڈ یونیورسٹی کی تحقیق میں بتایا گیا کہ 5 دن تک اس وٹامن کا زیادہ استعمال لوگوں کی خواب یاد رکھنے کی صلاحیت 64 فیصد تک بڑھا دیتا ہے۔ لوگوں کو ڈراؤنے خواب کیوں نظر آتے ہیں؟ اگرچہ یہ واضح نہیں ہوسکا۔

کہ ایسا کیوں ہوتا ہے مگر محققین کا خیال ہے کہ وٹامن بی سکس ایک امینو ایسڈ کو کیمیکل میں تبدیل کرتا ہے جو جذبات اور نیند پر اثرانداز ہوتا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ہر فرد اپنی زندگی کے اوسطاً 6 سال خواب کی حالت میں گزارتا ہے۔ تحقیق کے دوران کیے جانے والے تجربات سے عندیہ ملا کہ وٹامن بی سکس نہ صرف خواب کی ساخت، حیرت انگیزی یا رنگت پر اثرانداز ہوتا ہے بلکہ یہ خواب سے نیند کو متاثر بھی نہیں ہونے دیتا۔ نتائج میں مزید بتایا گیا کہ اس حوالے سے مزید تحقیق کی ضرورت ہے کہ غذائی وٹامن بی سکس کا اثر بھی ویسے ہی ہوتا ہے جیسے سپلیمنٹ کا۔ ڈراؤنے خواب کس بات کا عندیہ دیتے ہیں؟ اس تحقیق کے دوران 18 سے 40 سال کی عمر کے 100 افراد پر تجربات کیے گئے اور آغاز میں انہیں اپنے خواب یاد نہیں رہتے تھے۔ محققین نے انہیں مسلسل 5 دن تک روزانہ سونے سے قبل 240 ملی گرام وٹامن بی سکس سپلیمنٹ استعمال کرایا۔ اس تحقیق کے نتائج طبی جریدے جرنل Perceptual and Motor Skills میں شائع ہوئے۔

The post خوابوں کو یاد رکھنے کا نسخہ سامنے آگیا appeared first on JavedCh.Com.

Reference: http://javedch.com/healthنوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین صحت کے با رے ميں کسی بھی مضمون کے حوالے سے اپنے ڈاکٹر سےلازمي مشورہ لیں۔