اسلام آباد ۔ 18 دسمبر (اے پی پی) سکواش کے انٹرنیشنل کھلاڑی فرحان محبوب نے کہا ہے کہ حکومت دیگر کھیلوں کی طرح سکواش کھیل پر زیادہ سے زیادہ توجہ دے۔ بدھ کو مصحف سکواش کمپلیکس میں انٹرنیشنل سکواش ٹورنامنٹ کے فائنل میں کامیابی حاصل کرنے کے بعد اے پی پی سے گفتگو کرتے ہوئے فرحان محبوب نے کہاکہ میری کامیابی کا کریڈٹ میرے کوچز آصف خان اور فضل شاہ کو جاتا ہے کہ جہنوں نے مجھے دن رات محنت کروائی ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں نیشنل گیمز اور سائوتھ ایشین گیمز میں بھی میڈلز حاصل کر رکھے ہیں، پاکستان میں سکواش کے زیادہ سے زیادہ لیگ میچز کروانے کی ضرورت ہے اور ان میچوں کو دیکھ کر نوجوانوں میں کھیلنے کا شوق بڑھے گا اور ملک میں سکواش کے کھیل کو فروغ حاصل ہوگا۔ ایک سوال کے جواب میں فرحان محبوب نے کہا کہ میرے لئے کورٹ میں تمام میچر فائنل کی طرح ہوتے ہیں کیونکہ اگر کوالیفائنگ راؤنڈ ہارنے پر فائنل تک رسائی کیسے ممکن ہے کیونکہ میچ میں ایک ہی موقع ملتا ہے وہ بھی اگر ضائع ہو جائے تو کھلاڑی ٹورنامنٹ سے باہر ہو جاتا ہے، اس لئے میں ہر میچ فائنل سمجھ کر کھیلتا ہوں۔ ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ جان شیر خان اور جہانگیر خان نے دنیا سکواش میں اپنا ایک نام بنایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت دیگر کھیلوں کی طرح سکواش پر زیادہ سے زیادہ توجہ دے تاکہ پاکستان سکواش میں اپنا کھویا ہوا مقام دوبارہ حاصل کرسکے۔ فرحان محبوب نے کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ مصر کا یوسف ابراہیم سیمی فائنل میں اچھا کھیلا اور آج جمعرات کو فائنل میچ میں نئی حکمت عملی کے ساتھ میدان میں اتروں گا۔ انہوں نے کہا کہ ہار جیت کھیل کا حصہ ہے اور کم از کم کھلاڑی کو جان لڑا کر کھیلنا چاہئے تاکہ بعد میں کوئی افسوس نہ ہو۔

Reference: http://urdu.app.com.pk

Leave a comment

Post here